It is currently Mon Dec 11, 2017 12:49 pm

All times are UTC + 5 hours




 Page 1 of 8 [ 292 posts ]  Go to page 1, 2, 3, 4, 5 ... 8  Next
Author Message
 Post subject: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Thu Jan 05, 2012 11:00 am 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad

ہے دعا یاد مگر حرفِ دعا یاد نہیں
میرے نغمات کو اندازِ نوا یاد نہیں

ہم نے جن کے لیے راہوں میں بچھایا تھا لہو
ہم سے کہتے ہیں وہی عہدِ وفا یاد نہیں

زندگی جبرِ مسلسل کی طرح کاٹی ہے
جانے کس جرم کی پائی ہے سزا، یاد نہیں

میں نے پلکوں سے درِ یار پہ دستک دی ہے
میں وہ سائل ہوں جسے کوئی صدا یاد نہیں

کیسے بھر آئیں سرِ شام کسی کی آنکھیں
کیسے تھرائی ستاروں کی ضیا یاد نہیں

صرف دھندلائے ستاروں کی چمک دیکھی ہے
کب ہوا کون ہوا مجھ سے خفا یاد نہیں

آؤ اک سجدہ کریں عالمِ مدہوشی میں
لوگ کہتے ہیں کہ ساغر کو خدا یاد نہیں



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Thu Jan 05, 2012 11:04 am 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad

آنکھ میں بے کراں ملال کی شام
دیکھنا عشق کے زوال کی شام

میری قسمت ھے تیرے ہجر کا دن
میری حسرت تیرے وصال کی شام

دہکی دہکی تیرے جمال کی صبح
مہکی مہکی میرے خیال کی شام

روپ صدیوں کی دوپہر پہ محیط
اوڑھنی ھے کہ ماہ و سال کی شام

پھر وھی در وھی صدا"
پھر وھی میں وھی سوال کی شام



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Thu Jan 05, 2012 11:08 am 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad

پیدا راہ خلوص میں دشواریاں نہ کر
چاہت نہیں تو ہم سے اداکاریاں نہ کر

لفظوں سے کھیلنے کی ضرورت نہیں تجھے
سادہ دلوں کے ساتھ یہ فنکاریاں نہ کر

جن سے نہیں لگائو انہیں منہ بھی مت لگا
بے وجہ ہر دکان سے خریداریاں نہ کر

تو شاخِ گل ہے کوئی امر بیل تو نہیں
وابستہ ہر شجر سے وفاداریاں نہ کر

تازہ ہے دل پہ داغ اگر پہلی مات کا



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Thu Jan 05, 2012 11:12 am 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad

میں نے کب درد کی زخموں سے شکایت کی ہے
ہاں میرا جرم ہے کہ میں نے محبت کی ہے

چلتی پھرتی لاشوں کو گلہ ہے مجھ سے
شہر میں رہ کر میں نے جینے کی حسرت کی ہے

آج پہچانا نہیں جاتا چہرا اس کا
اک عمر میرے دل پہ جس نے حکومت کی ہے

آج پھر دیکھا ہے اسے محفل میں پتھر بن کر
میں نے آنکھوں سے نہیں دل سے بغاوت کی ہے

اس کو بھول جانے کی غلطی بھی نہیں کر سکتا
ٹوٹ کر کی ہے تو صرف محبت کی ہے



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Thu Jan 05, 2012 11:13 am 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad

ہاتھ چھوٹیں بھی تو رشتے نہیں چھوڑا کرتے
وقت کی شاخ سے لمحے نہیں توڑا کرتے

جس کی آواز میں سِلوٹ ہو، نگاہوں میں شکن
ایسی تصویر کے ٹکڑے نہیں جوڑا کرتے

لگ کے ساحل سے جوبہتا ہے اُسے بہنے دو
ایسے دریا کا کبھی رُخ نہیں موڑا کرتے

جاگنے پر بھی نہیں آنکھ سے گرتیں کرچیں
اس طرح خوابوں سے آنکھیں نہیں پھوڑا کرتے

شہد جینے کا مِلا کرتا ہے تھوڑا تھوڑا
جانے والوں کیلئے دِل نہیں توڑا کرتے

جمع ہم ہوتے ہیں ، تقیسم بھی ہوجاتے ہیں
ہم تو تفریق کے ہندسے نہیں جوڑا کرتے



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Thu Jan 05, 2012 11:14 am 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad

جیتے رہنے کی سزا دے زندگی ہے زندگی
اب تو مرنے کی دعا دے زندگی اے زندگی

میں تو اب اکتا گی ہوں کیا یہی ہے کائنات ؟
بس یہ آئینہ ہٹا دے زندگی اے زندگی

ڈھونڈنے نکلی تھی تجھکو اور خود کو کھو دیا
تو ہی اب میرا پتا دے زندگی اے زندگی

یا مجھے احساس کی اس قید سے کر دے رہا
ورنہ دیوانہ بنا دے زندگی اے زندگی



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Thu Jan 05, 2012 11:15 am 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad

نامہ بر اپنا ھواؤں کو بنانے والے
اب نہ آئیں گے پلٹ کر کبھی جانے والے

کیا ملے گا تجھے بکھرے ھوئے خوابوں کے سوا
ریت پر چاند کی تصویر بنانے والے

سب نے پہنا تھا بڑے شوق سے کاغذ کا لباس
جس قدر لوگ تھے بارش میں نہانے والے

مر گئے ہم تو یہ کتبے پہ لکھا جائے گا
سو گئے آپ زمانے کو جگانے والے

در و دیوار پہ حسرت سی برستی ھے قتیل
جانے کس دیس گئے پیار نبھانے والے



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Thu Jan 05, 2012 11:28 am 
Special Super Dooper Member
User avatar

Joined: Tue Sep 27, 2005 8:41 am
Posts: 46580
Great collection :b)b: keep sharing.



_________________
Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Thu Jan 05, 2012 11:31 am 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad
sono wrote:
Great collection :b)b: keep sharing.


Shukriya.... :)



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Thu Jan 05, 2012 11:50 am 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad

دِل کی چوکھٹ جو اِک دیپ جلا رکھا ہے
تِرے لوٹ آنے کا اِمکان سجا رکھا ہے

سانس تک بھی نہیں لیتے ہیں تجھے سوچتے وقت
ہم نے اِس کام کو بھی کل پہ اُٹھا رکھا ہے

رُوٹھ جاتے ہو تو کچھ اور حسیں لگتے ہو
ہم نے یہ سوچھ کے ہی تم کو خفا رکھا ہے

تم جسے رُوٹھا ہوا چھوڑ گئے تھے اِک دِن
ہم نے اُس شام کو سینے سے لگا رکھا ہے

چین لینے نہیں دیتے کسی طور مجھے
تِری یادوں نے جو طُوفان اُٹھا رکھا ہے

جانے والے نے کہا تھا کہ وہ لوٹے گا ضرُور
aاِک اِسی آس پہ دروازہ کھلا رکھا ہے

مجھ کو کل شام سے وہ یاد بہت آنے لگا
دِل نے مُدت سے جو اِک شخص بھلا رکھا ہے



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Thu Jan 05, 2012 11:52 am 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad

خامشی رنگ ہوئی جاتی ہے دھیرے دھیرے
ایک تصویر بنی جاتی ہے دھیرے دھیرے

وقت کے سیل میں یہ خواب سی بہتی ساعت
خود ہی تعبیر ہوئی جاتی ہے دھیرے دھیرے

زندگی تجھ کو کوئی کیسے کرے تیز قدم
باد تلخ تو پی جاتی ہے دھیرے دھیرے

زندگی کی جو بنائی تھی خیالی تصویر
اس پہ اب گرد جمی جاتی ہے دھیرے دھیرے

وہ جو اک خواہشِ خوش بستہ تھی اپنے جی میں
برف کی طرح گھلی جاتی ہے دھیرے دھیرے

تم نے اقرارِ محبت کو زباں کھولی ہے
اور یہاں سانس رکی جاتی ہے دھیرے دھیرے



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Thu Jan 05, 2012 12:00 pm 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad

کچھ بھی تو اپنے پاس نہیں جُز متاعِ دل
کیا اس سے بڑھ کے اور بھی کوئی ہے امتحاں

لکھنے کو لکھ رہے ہیں غضب کی کہانیاں
لکھی نہ جا سکی مگر اپنی ہی داستاں !

دل سے دماغ و حلقۂ عرفاں سے دار تک
ہم خود کو ڈھونڈتے ہوئے پہنچے کہاں کہاں

اس بےوفا پہ بس نہیں چلتا تو کیا ہوا ؟
اُڑتی رہیں گی اپنے گریباں کی دَھجیاں

ہم خود ہی کرتے رہتے ہیں فتنوں کی پرورش
آتی نہیں ہے کوئی بَلا ہم پہ ناگہاں



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Thu Jan 05, 2012 12:03 pm 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad

میں گرد ھوں آ کر کے صفا مجھ کو دیکھا دے...
تو وقت ھے تو رک جا میرے ھوش اڑا دے...


تو تیر کی مانند ھے تو تیز ھوا سا...
جو بیٹھے ھیں چپ چاپ انھیں شعلہ نوا دے..
ھر حال میں انساں کی بقا میرا ھے مقصود...
تو وقت ھے سایہ ھے آ مجھ کو پناہ دے....

کس جرم کی کیا کس نے سزا کس کو کبھی دی..
یہ کام نھیں تیرا تو آ جام جفا دے...

ھر با نیا رنگ تیرا دیکھ کے انساں...
کھتا ھے کبھی لوٹ کے آ پھر سے ملا دے

جو لوٹ کے آ جائے تجھے اس سے ھے کیا غرض...؟
تو پھول کھلا مھک بڑھا،شام سجا دے...



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Thu Jan 05, 2012 1:31 pm 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad
ترکِ تعلقات تقاضہ اسی کا تھا
پھر حال پریشان اگر تھا اسی کا تھا

کیا سوچ کر وہ نیند مری ساتھ لے گیا
میرا تو خواب خواب خدایا اسی کا تھا

پہلے تھے خواب خواب میں روشن نقوش دوست
پھر رتجگوں کی دُھند میں سایہ اسی کا تھا

خلوت میں بھی گریز تھا اس کو ملاپ سے
قربت میں بھی فراق رویہ اسی کا تھا
وہ شہر بھر میں ایک مجھی سے ناآشنا
میں شہر بھر میں ایک شناسا اسی کا تھا

ڈوبا ادھر یہ دل تو ادھر چاند بھی گیا
دونوں کو انتظار ہی دیکھا! اسی کا تھا

ناصر یوں زندگی نے کئی غم دیئے مگر
وہ دکھ کہ روگ بن گیا تنہا اسی کا تھا



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Thu Jan 05, 2012 1:35 pm 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad
سرِ مقتل بھی صدا دی ہم نے
دل کی آواز سنا دی ہم نے

پہلے اک روزنِ در توڑا تھا
اب کے بنیاد ہلا دی ہم نے

پھر سرِ صبح وہ قصہ چھیٹرا
دن کی قندیل بجھا دی ہم نے

آتشِ غم کے شرارے چن کر
آگ زنداں میں لگا دی ہم نے

رہ گئے دستِ صبا کمھلا کر
پھول کو آگ پلا دی ہم نے

آتشِ گل ہو کہ ہو شعلۂِ ساز
جلنے والوں کو ہوا دی ہم نے

کتنے ادوار کی گم گشتہ نوا
سینۂِ نَے میں چھپا دی ہم نے

دمِ مہتاب فشاں سے
آج تو رات جگا دی ہم نے



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Thu Jan 05, 2012 1:38 pm 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad
مجھ کو رسوا سر محفل تو نہ کروایا کرے
کاش آنسو میرے آنکھوں میں ہی رہ جایا کرے

اے ہوا میں نے تو بس اس کا پتہ پوچھا تھا
اب کہانی تو نہ ہر بات کی بن جایا کرے

بس بہت دیکھ لئے خواب سہانے دن کے
اب وہ باتوں کی رفاقت سے نہ بہلایا کرے

اک مصیبت تو نہیں ٹوٹی سو اب اس دل سے
جس قیامت نے گزرنا ہے گزر جایا کرے

جس کے خوابوں کو میں آنکھوں میں سجا کر رکھوں
اس کی خوشبو کبھی مجھ کو بھی تو مہکایا کرے



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Thu Jan 05, 2012 1:41 pm 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad

اور کچھ اور ستانے کی اجازت ہے تمہیں
اب مجھے چھوڑ کے جانے کی اجازت ہے تمہیں

راہ میں روشنی اچھی نہیں لگتی تم کو
ہاتھ سے ہاتھ چھڑانے کی اجازت ہے تمہیں

کیا کروں دوست! میرا موسمِ گریہ تم ہو
اس لیے خُوب رُلانے کی اجازت ہے تمہیں

چاہتے ہو کہ میں دیکھوں کبھی چہرہ اپنا
آئینہ ڈھونڈ کے لانے کی اجازت ہے تمہیں

ہاتھ وہ کاٹ کے میرے مجھے کہتا ہے
شہر پر ہاتھ اٹھانے کی اجازت ہے تمہیں



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Thu Jan 05, 2012 1:43 pm 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad

ابھی ہجر کا قیام ہے اور دسمبر آن پہنچا ہے
یہ خبر شہر میں عام ہے دسمبر آن پہنچا ہے

آنگن میں اُتر آئی ہے مانوس سی خوشبو
یادوں کا اژدہام ہے ، دسمبر آن پہنچا ہے

خاموشیوں کا راج ہے ،خزاں تاک میں ہے
اداسی بھی بہت عام ہے ،دسمبر آن پہنچا ہے

تیرے آنے کی امید بھی ہو چکی معدوم
نئے برس کا اہتمام ہے ،دسمبر آن پہنچا ہے

خُنک رت میں تنہائی بھی چوکھٹ پہ کھڑی ہے
جاڑے کی اداس شام ہے ،دسمبر آن پہنچا ہے

تم آؤ تو مرے موسموں کی بھی تکمیل ہو جائے
نئے رُت تو سرِ بام ہے ، دسمبر آن پہنچا ہے



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Thu Jan 05, 2012 1:47 pm 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad
سناتا ہے کوئی بھولی کہانی
مہکتے میٹھے دریاؤں کا پانی

یہاں جنگل تھے آبادی سے پہلے
سنا ہے میں نے لوگوں کی زبانی

یہاں اک شہر تھا شہرِ نگاراں
نہ چھوڑی وقت نے اس کی نشانی

میں وہ دل ہوں دبستانِ الم کا
جسے روئے گی صدیوں شادمانی

تصور نے اسے دیکھا ہے اکثر
خرد کہتی ہے جس کو لا مکانی

خیالوں ہی میں اکثر بیٹھے بیٹھے
بسا لیتا ہوں اک دنیا سہانی



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Thu Jan 05, 2012 1:49 pm 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad
<>
روح کو ہجر کے کانٹوں سے گزارے تو سہی
وہ تو خود چاہتا ہے کوئی پکارے تو سہی

پھر یہ دیکھے کہ بھلا کون ہے کتنا گہرا
دل کوئی گہرے سمندر میں اتارے تو سہی

وہ مری طرح ریاضت تو کرے مرنے کی
وہ مری طرح تمناؤں کو مارے تو سہی

پھر میں اک ہنستی ہوئی صبح اسے لا کر دوں
رات وہ میرے لیے رو کے گزارے تو سہی

زند گی جنگ ہے اس جنگ کو جیتے تو سہی
زندگی کھیل ہے اس کھیل میں ہارے تو سہی



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Thu Jan 05, 2012 1:51 pm 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad

کیوں چھپ گیا ہے شام سے اندھے مکان میں
کیا کہہ گئی ہے تیز ہوا تیرے کان میں

وہ وقت تھا جو لوٹ کے آیا نہیں کبھی
وہ تیر ہوں جو آ گیا واپس کمان میں

گذرا ہے کوئی تاروں پہ رکھتا ہوا قدم
لکھے ہوئے ہیں نقشِ قدم آسمان میں

لرزاں ہے میری آنکھ میں کس آئینے کا عکس
رس گھولتی ہے کون صدا میرے کان میں

روتا ہے کوئی رات کے پچھلے پہر عطا
آیا ہے کون ساتھ کے اُجڑے مکان میں



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Thu Jan 05, 2012 8:29 pm 
Junior Moderator
User avatar

Joined: Sat Nov 26, 2011 1:30 pm
Posts: 15749
Location: ĹŐVĔ ĞĂŔĎĔŃ :)
DiL Da JaNi wrote:

آنکھ میں بے کراں ملال کی شام
دیکھنا عشق کے زوال کی شام

میری قسمت ھے تیرے ہجر کا دن
میری حسرت تیرے وصال کی شام

دہکی دہکی تیرے جمال کی صبح
مہکی مہکی میرے خیال کی شام

روپ صدیوں کی دوپہر پہ محیط
اوڑھنی ھے کہ ماہ و سال کی شام

پھر وھی در وھی صدا"
پھر وھی میں وھی سوال کی شام

bht hi khubsurat intakhab he Dil ji :buke:
aik aik sharing lajawab he :b)b:
khush rahiye :mrgreen:



_________________
Image

Dushman k Chakke Chhura den Hum India wale
Ungli pe sab ko nacha den Hum India wale
Hidden: show
Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Sat Jan 07, 2012 5:26 pm 
Moderator
User avatar

Joined: Sun Feb 14, 2010 6:59 pm
Posts: 14280
mashallah tamam sharings hi buhat khub hain keep it up...... :b)b: :b)b: :b)b: :)O :)O :)O :)O :)O



_________________
Image
Image



میرے صبر پر کوئی اجر کیا، میری دوپہر پر یہ ابر کیوں؟
مجھے اوڑھنے دے اذیتیں، میری عادتیں نہ خراب کر
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Tue Jan 10, 2012 11:43 am 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad
Rose Bud wrote:
DiL Da JaNi wrote:

آنکھ میں بے کراں ملال کی شام
دیکھنا عشق کے زوال کی شام

میری قسمت ھے تیرے ہجر کا دن
میری حسرت تیرے وصال کی شام

دہکی دہکی تیرے جمال کی صبح
مہکی مہکی میرے خیال کی شام

روپ صدیوں کی دوپہر پہ محیط
اوڑھنی ھے کہ ماہ و سال کی شام

پھر وھی در وھی صدا"
پھر وھی میں وھی سوال کی شام

bht hi khubsurat intakhab he Dil ji :buke:
aik aik sharing lajawab he :b)b:
khush rahiye :mrgreen:


Shukriya....



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Tue Jan 10, 2012 11:44 am 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad
Qaiser-Aziz-Qais wrote:
mashallah tamam sharings hi buhat khub hain keep it up...... :b)b: :b)b: :b)b: :)O :)O :)O :)O :)O


Shukriya....



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Tue Jan 10, 2012 11:50 am 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad

تربت کہاں لوحِ سرِ تربت بھی نہیں ہے
اب تو تمہیں پھولوں کی ضرورت بھی نہیں ہے
وعدہ تھا یہیں کا جہان فرصت بھی نہیں ہے
اب آ گے کوئی اور قیامت بھی نہیں ہے
اظہارِ محبت پہ برا مان گئے وہ
اب قابلِ اظہار محبت بھی نہیں ہے
کس سے تمہیں تشبیہ دوں یہ سوچ رہا ہوں
ایسی تو جہان میں کوئی صورت بھی نہیں ہے
تم میری عیادت کے لئے کیوں نہیں آتے
اب تو مجھے تم سے یہ شکایت بھی نہیں ہے
اچھا مجھے منظور قیامت کا بھی وعدہ
اچھا کوئی اب دور قیامت بھی نہیں ہے
باتیں یہ حسینوں کی سمجھتا ہے قمرؔ خوب
نفرت وہ جسے کہتے ہیں نفرت بھی نہیں ہے



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Tue Jan 10, 2012 11:52 am 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad

میرے دل میں تیری یادوں کے سائے
ہوا جیسے کھنڈرمیں سرسرائے

ہم ہی نے سب کے غم کواپنا جانا
ہم ہی نے سب کے ہاتھوں زخم کھائے

دل بیتاب کی وصعت تودیکھو
زمانے بھرکے اس میں غم سمائے

کسی نے پیارسے جب بھی پکارا
توپلکوں پرستارے جھلملائے

شب فرقت ہراک آہٹ پہ مجھکو
یہی دھوکا ہوا شاید وہ آئے

خوشی دی ہے زمانے بھرکوامداد
اگرچہ عمربھرآنسوبہائے



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Tue Jan 10, 2012 11:53 am 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad
بھولتا ہوں اسے یاد آئے مگر بول میں کیا کروں
جینے دیتی نہیں اس کی پہلی نظر بول میں کیا کروں

تیرگی خوب ہے، کوئی ہمدم نہیں، کوئی رہبر نہیں
مجھ کو درپیش ہے ایک لمبا سفر بول میں کیا کروں

خود سے ہی بھاگ کر میں کہاں جاؤں گا، یونہی مر جاؤں گا
کوئی صورت بھی آتی نہیں اب نظر بول میں کیا کروں

میری تنہائی نے مجھ کو رسوا کیا، گھر بھی زندان ہے
مجھ پہ ہنسنے لگے اب تو دیوار و در بول میں کیا کروں

اڑ بھی سکتا نہیں، آگ ایسی لگی، کس کو الزام دوں
دھیرے دھیرے جلے ہیں مرے بال و پر بول میں کیا کروں

تو مرا ہو گیا، میں ترا ہو گیا، اب کوئی غم نہیں
پھر بھی دل میں بچھڑنے کا رہتا ہے ڈر بول میں کیا کروں



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Tue Jan 10, 2012 11:55 am 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad

جہاں وحشتیں ہوں اِدھر اُدھر، جہاں نفرتوں کے سحاب ہوں
وہاں سانس لیں بھی تو کس طرح، جہاں چاہتوں پہ عذاب ہوں
جنہیں دیکھ کر مری زندگی کا ہر ایک باب ہو سرخرو
اے مرے خدا مری آنکھ میں کبھی اِس طرح کے بھی خواب ہوں
تُو چلے اگر تو یہ کائنات سِمٹ کے تیری نظر بنے
تُو رُکے جہاں فقط ایک پل وہاں حیرتوں کے شہاب ہوں
تری بات جیسے رواں رگوں میں نئی رُتوں کے ہوں ذائقے
ترے لفظ جیسے گُہر لیے کئی سیپیاں تہہِ آب ہوں
تری چاہ سے مری دھڑکنوں میں عجب سوال دھڑک اُٹھیں
تری چشمِ مست میں جابجا انہی دھڑکنوں کے جواب ہوں
ترے خال و خد سے ملے مجھے مرے اپنے "ہونے" کا حوصلہ
تجھے سوچ کر میں لکھوں اگر تو تمام لفظ گلاب ہوں
کوئی ایسا خطۂ سرزمیں، مری بستیوں میں نہ ہو کہیں
جہاں ہر قدم ہو عذابِ جاں، جہاں لمحہ لمحہ سراب ہوں
تجھے کھو کے گردشِ روز و شب میں کھڑا ہوں کیسے وقار سے
مجھے مت پکار مرے سجن، مری محنتیں نہ خراب ہوں



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Tue Jan 10, 2012 11:57 am 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad

مری سانسوں کی خوشبو سے تجھے زنجیر ہونا ہے
ابھی اس خواب کو شرمندہ تعبیر ہونا ہے

یہ کہہ کر اپنی محرومی کو بہلاتا ہے دل اپنا
اگر وہ چاند ہے تو پھر اُسے تسخیر ہونا ہے



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Wed Jan 11, 2012 12:55 am 
Moderator
User avatar

Joined: Sun Feb 14, 2010 6:59 pm
Posts: 14280
wah g wah kia baat hai DiL Da JaNi ji buhat khubsurat sharings hain tamam ki tamam hi...........keep posting........ :b)b: :b)b: :b)b: :b)b: :)O :)O :)O :)O :)O :)O :)O



_________________
Image
Image



میرے صبر پر کوئی اجر کیا، میری دوپہر پر یہ ابر کیوں؟
مجھے اوڑھنے دے اذیتیں، میری عادتیں نہ خراب کر
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Wed Jan 11, 2012 2:59 pm 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad
Qaiser-Aziz-Qais wrote:
wah g wah kia baat hai DiL Da JaNi ji buhat khubsurat sharings hain tamam ki tamam hi...........keep posting........ :b)b: :b)b: :b)b: :b)b: :)O :)O :)O :)O :)O :)O :)O


Pasand kerny ka shukriya....



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Wed Jan 11, 2012 3:07 pm 
Special Super Dooper Member
User avatar

Joined: Sat Dec 10, 2005 6:13 am
Posts: 43724
Location: London
buhat khubsoorat integhaab e shairy...umdah !!
khush rahain :dua



_________________
Image
Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Thu Jan 12, 2012 3:13 pm 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad
subahh wrote:
buhat khubsoorat integhaab e shairy...umdah !!
khush rahain :dua



Shukriya.....



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Thu Jan 12, 2012 3:15 pm 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad

لبوں پہ گیت تو آنکھوں میں خواب رکھتے تھے
کبھی ہم بھی کتابوں میں گلاب رکھتے تھے

کبھی کسی کا جو ہوتا انتظار ہمیں
بڑا ہی شام و سحر کا حساب رکھتے تھے



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Fri Jan 13, 2012 9:52 am 
Special Super Dooper Member
User avatar

Joined: Tue Sep 27, 2005 8:41 am
Posts: 46580
bohat umda sharing :b)b:



_________________
Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Sat Jan 14, 2012 12:00 pm 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad
sono wrote:
bohat umda sharing :b)b:



Shukriya.....



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Sat Jan 14, 2012 12:05 pm 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad

ہمیں خبر تھی کہ یہ درد اب تھمے گا نہیں
یہ دل کا ساتھ بہت دیر تک رہے گا نہیں

ہمیں خبر تھی کوئی آنکھ نم نہیں ہو گی
ہمارے غم میں کہیں کوئی دل دکھے گا نہیں

ہمیں خبر تھی کہ اک روز یہ بھی ہونا ہے
کہ ہم کلام کریں گے کوئی سنے گا نہیں

ہماری دربدری جانتی تھی برسوں سے
گھر جائیں بھی تو کوئی پناہ دے گا نہیں

ہماری طرح نہ آئے گا کوئی نرغے میں
ہماری طرح کوئی قافلہ لٹے گا نہیں

نمود خواب کی باتیں شکست خواب کا ذکر
ہمارے بعد یہ قصے کوئی کہے گا نہیں

غریب شہر ہو یا شہر یار ہفت اقلیم
یہ وقت ہے یہ کسی کے لیے رکے گا نہیں

مگر چراغ ہنر کا معاملہ ہے کچھ اور
یہ ایک بار جلا ہے تو اب بجھے گا نہیں



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Sat Jan 14, 2012 12:06 pm 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad

ہم نہ ہوئے تو کوئی افق مہتاب نہیں دیکھے گا
ایسی نیند اڑے گی پھر کوئی خواب نہیں دیکھے گا

نرمی اور مٹھاس میں ڈوبا یہی مہذب لہجہ
تلخ ہوا تو محفل کے آداب نہیں دیکھے گا

پیش لفظ سے اختتام تک پڑھنے والا قاری
جس میں ہم تحریر ہیں بس وہی باب نہیں دیکھے گا

لہو رلاتے خاک اڑاتے موسم کی سفاکی
دیکھتے ہیں کب تک یہ شہر گلاب نہیں دیکھے گا

بپھرے ہوئے دریا کو ہوا کا ایک اشارہ کافی
کوئی گھر کوئی بھی گھر سیلاب نہیں دیکھے گا

بے معنی بے مصرف عمر کی آخری شام کا آنسو
ایک سبب دیکھے گا سب اسباب نہیں دیکھے گا

اک ہجرت اور ایک مسلسل دربدری کا قصہ
سب تعبریں دیکھیں گے کوئی خواب نہیں دیکھے گا



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: $håß-É-Tâñhâî ...........
PostPosted: Sat Jan 14, 2012 12:08 pm 
Special Member
User avatar

Joined: Tue May 04, 2010 4:56 pm
Posts: 931
Location: Pakistan,Faisalabad

کہتے ہیں جس کو ذات وہ گویا کہیں نہیں
دنیا میں دیکھ آئے، یہ در وا کہیں نہیں

صحرا پہ میں نے آج یہ نکتہ رقم کیا
دریا کا علم جز تہ ِ دریا کہیں نہیں

پائے سفر شکستہ ہوئے، مدتیں ہوئیں
میں راستے میں ہوں ابھی، پہنچا کہیں نہیں

دے مال ہم کو مفت، ہم اصحاب ِ کہف ہیں
سکہ ہمارے دور کا چلتا کہیں نہیں



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
Display posts from previous:  Sort by  
 Page 1 of 8 [ 292 posts ]  Go to page 1, 2, 3, 4, 5 ... 8  Next

All times are UTC + 5 hours


Who is online

Users browsing this forum: Bing [Bot] and 1 guest


You cannot post new topics in this forum
You cannot reply to topics in this forum
You cannot edit your posts in this forum
You cannot delete your posts in this forum
You cannot post attachments in this forum

Jump to: