It is currently Mon Dec 11, 2017 12:45 pm

All times are UTC + 5 hours




 Page 24 of 25 [ 982 posts ]  Go to page Previous  1 ... 21, 22, 23, 24, 25  Next
Author Message
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Fri Jul 05, 2013 6:58 am 
Special Super Dooper Member
User avatar

Joined: Sat Dec 10, 2005 6:13 am
Posts: 43724
Location: London
wahhhh kiya nageena dhoondh ke nikala hae....haseen kalam ..aala pasund hae aapki....hum qail hoe aapke integhaab e shairy k
khush rahain meena :dua



_________________
Image
Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Fri Jul 05, 2013 7:57 am 
Super Dooper Member

Joined: Fri Jun 18, 2010 10:52 am
Posts: 37048
Meena wrote:


یقینِ شکست


مری آنکھ کُھل گئی یک بیک ، مِری بے خودی کی سحر ہوئی
کہ مآلِ عشق سے آشنا یہ فریب خوردہ نظر ہوئی
وہ حسین رُت بھی بدل گئی، وہ فضا بھی زیروزبر ہوئی
ہوئی موت مجھ سے قریب تر، مجھے آج اِس کی خبر ہوئی

ترے التفات نے کردیا تھا مجھے نصیب سے بےخبر
میں تمام کیف و سرور تھا ، مری حد میں غم کا نہ تھا گذر
مرے دل کو تجھ پہ غرور تھا، مجھےناز تھا ترے پیار پر
ترا پیار ہائے، تھا مختصر، مجھے آج اس کی خبر ہوئی

وہ حسیں سحر، وہ شب حسیں، وہ وفورِ شوق، وہ زندگی
وہ نوازشیں، وہ عنائتیں، وہ کرم، وہ لطف، وہ دلدہی
ترا روٹھنا، ترا ماننا، تری بےرخی، تری بےخودی
کبھی اب نہ دیکھ سکوں گا عمر بھر، مجھے آج اس کی خبر ہوئی

ہے کسی کا اور تو کیا گلہ ، میں خود اپنی آنکھ میں خوار ہوں
کبھی مجھ پہ بار ہے زندگی، کبھی زندگی پہ میں بار ہوں
جو اُتر گیا وہ خمار ہوں، جو خزاں ہوئی وہ بہار ہوں
تمہیں میری کچھ بھی نہیں خبر، مجھے آج اس کی خبر ہوئی

وہی آہ جس نے کبھی زمیں کو فلک سے اُٹھ کے ہلا دیا
وہی آہ جس نے مرے نصیب کی تیرگی کو مٹا دیا
وہی آہ جس نے بدل کے خو تری لطف تجھ کو سکھا دیا
اُسی آہ میں نہیں اب اثر ، مجھے آج اس کی خبر ہوئی

وہ زمانہ کیف و نشاط کا ، وہ خودی میں ایک سرور سا
وہ شکست عقل و شعور کی، وہ جنوں میں جیسے غرور سا
وہ غریبِ عشق بھی چُور سا، وہ غیور حسن بھی چُور سا
وہ سرور مٹ کے رہا مگر مجھے آج اس کی خبر ہوئی

نہ سکوں میں بھی وہ ملے گا اب کہ جو کیف دردِ جگر میں تھا
کبھی چُور عیش و خوشی میں تھا کبھی چُور غم کے اثر میں تھا
ترا کیفی آج بھی ہے وہی کہ جو پہلے تیری نظر میں تھا
مگر اب نہیں وہ تری نظر، مجھے آج اس کی خبر ہوئی

(کیفی اعظمی)

ah, wah, bohat dilkash nazam hai, aik aik satar ne dil moh lia... ehsasat kia khoob qalmband kiye gaye hain... aik aik ruwan jal-bujh utha hai... itni behtareen sharing k liye daad qubool kijye...
:)O



_________________
Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Fri Jul 05, 2013 2:22 pm 
Moderator
User avatar

Joined: Tue Jun 14, 2011 11:13 pm
Posts: 4607
Location: DG KHAN
Meena wrote:


یقینِ شکست


مری آنکھ کُھل گئی یک بیک ، مِری بے خودی کی سحر ہوئی
کہ مآلِ عشق سے آشنا یہ فریب خوردہ نظر ہوئی
وہ حسین رُت بھی بدل گئی، وہ فضا بھی زیروزبر ہوئی
ہوئی موت مجھ سے قریب تر، مجھے آج اِس کی خبر ہوئی

ترے التفات نے کردیا تھا مجھے نصیب سے بےخبر
میں تمام کیف و سرور تھا ، مری حد میں غم کا نہ تھا گذر
مرے دل کو تجھ پہ غرور تھا، مجھےناز تھا ترے پیار پر
ترا پیار ہائے، تھا مختصر، مجھے آج اس کی خبر ہوئی

وہ حسیں سحر، وہ شب حسیں، وہ وفورِ شوق، وہ زندگی
وہ نوازشیں، وہ عنائتیں، وہ کرم، وہ لطف، وہ دلدہی
ترا روٹھنا، ترا ماننا، تری بےرخی، تری بےخودی
کبھی اب نہ دیکھ سکوں گا عمر بھر، مجھے آج اس کی خبر ہوئی

ہے کسی کا اور تو کیا گلہ ، میں خود اپنی آنکھ میں خوار ہوں
کبھی مجھ پہ بار ہے زندگی، کبھی زندگی پہ میں بار ہوں
جو اُتر گیا وہ خمار ہوں، جو خزاں ہوئی وہ بہار ہوں
تمہیں میری کچھ بھی نہیں خبر، مجھے آج اس کی خبر ہوئی

وہی آہ جس نے کبھی زمیں کو فلک سے اُٹھ کے ہلا دیا
وہی آہ جس نے مرے نصیب کی تیرگی کو مٹا دیا
وہی آہ جس نے بدل کے خو تری لطف تجھ کو سکھا دیا
اُسی آہ میں نہیں اب اثر ، مجھے آج اس کی خبر ہوئی

وہ زمانہ کیف و نشاط کا ، وہ خودی میں ایک سرور سا
وہ شکست عقل و شعور کی، وہ جنوں میں جیسے غرور سا
وہ غریبِ عشق بھی چُور سا، وہ غیور حسن بھی چُور سا
وہ سرور مٹ کے رہا مگر مجھے آج اس کی خبر ہوئی

نہ سکوں میں بھی وہ ملے گا اب کہ جو کیف دردِ جگر میں تھا
کبھی چُور عیش و خوشی میں تھا کبھی چُور غم کے اثر میں تھا
ترا کیفی آج بھی ہے وہی کہ جو پہلے تیری نظر میں تھا
مگر اب نہیں وہ تری نظر، مجھے آج اس کی خبر ہوئی

(کیفی اعظمی)



Awesome... :b)b:

Bht acha intakhab :b)b:

Thanks for sharing

:buke: :buke: :buke:




_________________
Image

اگر غم سے بهی آگ کی طرح دهواں نکلتا تو جہاں ہمیشہ تاریک رہتا
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Sat Jul 06, 2013 6:21 pm 
EverGreen Member
User avatar

Joined: Sun Jun 19, 2005 10:34 pm
Posts: 4033
Location: England
aap ne hamara intikhab paRha.....pasand kiya.....hamain bhut khushi huyii...... :)


sab saathyoN ka bht bht shukriya...... :)O

sada sukhi rahye


meena



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Sat Jul 06, 2013 6:23 pm 
EverGreen Member
User avatar

Joined: Sun Jun 19, 2005 10:34 pm
Posts: 4033
Location: England



آنکھیں جن کو دیکھ نہ پائیں، سپنوں میں بکھرا دینا
جتنے بھی ہیں رُوپ تمہارے، جیتے جی دکھلا دینا

رات اور دن کے بیچ کہیں پر، جاگے سوئے رستوں میں
میں تم سے اک بات کہوں گا، تم بھی کچھ فرما دینا

اب کی رُت میں جب دھرتی کو، برکھا کی مہکار ملے
میرے بدن کی مٹی کو بھی، رنگوں سے نہلا دینا

دل دریا ہے دل ساگر ہے، اس دریا اس ساگر کی
ایک ہی لہر کا آنچل تھامے، ساری عمر بتِا دینا

ہم بھی لے کو تیز کریں گے، بوندوں کی بوچھار کے ساتھ
پہلا ساون جھولنے والو، تم بھی پینگ بڑھا دینا

فصل تمہاری اچھی ہوگی، جاو ہمارے کہنے سے
اپنے گاوٗں کی ہر گوری کو، نئی چُنریا لا دینا

ہجر کی آگ میں اے ری ہواوٗ، دو جلتے گھر اگر کہیں
تنہا تنہا جلتے ہوں تو، آگ میں آگ ملا دینا

آج کی رات کوئی بیراگن، کسی سے آنسو بدلے گی
بہتے دریا اُڑتے بادل، جہاں بھی ہوں ٹھہرا دینا

جاتے سال کی آخری شامیں، بالک چوری کرتی ہیں
آنگن آنگن آگ جلانا، گلی گلی پہرہ دینا

نیم کی چھاوٗں میں بیٹھنے والے، سبھی کے سیوک ہوتے ہیں
کوئی ناگ بھی آنکلے تو، اُس کو دودھ پلا دینا

تیرے کرم سے یارب سب کو، اپنی اپنی مراد ملے
جس نے ہمارا دل توڑا ہے، اُس کو بھی بیٹا دینا

یہ مرے پودے، یہ مرے پنچھی، یہ مرے پیارے پیارے لوگ
میرے نام جو بادل آئے، بستی میں برسا دینا

آج دھنک میں رنگ نہ ہوں گے، ویسے جی بہلانے کو
شام ہوئے پر نیلے پیلے، کچھ بیلون اُڑا دینا

اوس سے بھیگے شہر سے باہر، آتے دن سے ملنا ہے
صبح تلک سنسار رہے تو، ہم کو جلد جگا دینا

رئیس فروغ



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Sat Jul 06, 2013 11:23 pm 
Special Super Dooper Member
User avatar

Joined: Sat Dec 10, 2005 6:13 am
Posts: 43724
Location: London
khubsoorat integhaab....pasund aaya,shukria share krne ka
khush rahain :dua



_________________
Image
Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Sun Jul 07, 2013 4:07 pm 
Moderator
User avatar

Joined: Tue Jun 14, 2011 11:13 pm
Posts: 4607
Location: DG KHAN
Meena wrote:



آنکھیں جن کو دیکھ نہ پائیں، سپنوں میں بکھرا دینا
جتنے بھی ہیں رُوپ تمہارے، جیتے جی دکھلا دینا

رات اور دن کے بیچ کہیں پر، جاگے سوئے رستوں میں
میں تم سے اک بات کہوں گا، تم بھی کچھ فرما دینا

اب کی رُت میں جب دھرتی کو، برکھا کی مہکار ملے
میرے بدن کی مٹی کو بھی، رنگوں سے نہلا دینا

دل دریا ہے دل ساگر ہے، اس دریا اس ساگر کی
ایک ہی لہر کا آنچل تھامے، ساری عمر بتِا دینا

ہم بھی لے کو تیز کریں گے، بوندوں کی بوچھار کے ساتھ
پہلا ساون جھولنے والو، تم بھی پینگ بڑھا دینا

فصل تمہاری اچھی ہوگی، جاو ہمارے کہنے سے
اپنے گاوٗں کی ہر گوری کو، نئی چُنریا لا دینا

ہجر کی آگ میں اے ری ہواوٗ، دو جلتے گھر اگر کہیں
تنہا تنہا جلتے ہوں تو، آگ میں آگ ملا دینا

آج کی رات کوئی بیراگن، کسی سے آنسو بدلے گی
بہتے دریا اُڑتے بادل، جہاں بھی ہوں ٹھہرا دینا

جاتے سال کی آخری شامیں، بالک چوری کرتی ہیں
آنگن آنگن آگ جلانا، گلی گلی پہرہ دینا

نیم کی چھاوٗں میں بیٹھنے والے، سبھی کے سیوک ہوتے ہیں
کوئی ناگ بھی آنکلے تو، اُس کو دودھ پلا دینا

تیرے کرم سے یارب سب کو، اپنی اپنی مراد ملے
جس نے ہمارا دل توڑا ہے، اُس کو بھی بیٹا دینا

یہ مرے پودے، یہ مرے پنچھی، یہ مرے پیارے پیارے لوگ
میرے نام جو بادل آئے، بستی میں برسا دینا

آج دھنک میں رنگ نہ ہوں گے، ویسے جی بہلانے کو
شام ہوئے پر نیلے پیلے، کچھ بیلون اُڑا دینا

اوس سے بھیگے شہر سے باہر، آتے دن سے ملنا ہے
صبح تلک سنسار رہے تو، ہم کو جلد جگا دینا

رئیس فروغ



Awesome... :b)b:

Bht acha intakhab :b)b:

Thanks for sharing

:buke: :buke: :buke:




_________________
Image

اگر غم سے بهی آگ کی طرح دهواں نکلتا تو جہاں ہمیشہ تاریک رہتا
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Mon Jul 08, 2013 8:01 pm 
Moderator
User avatar

Joined: Thu Jan 21, 2010 2:47 pm
Posts: 8830
Location: apney dil ky dil mein
Meena wrote:



آنکھیں جن کو دیکھ نہ پائیں، سپنوں میں بکھرا دینا
جتنے بھی ہیں رُوپ تمہارے، جیتے جی دکھلا دینا

رات اور دن کے بیچ کہیں پر، جاگے سوئے رستوں میں
میں تم سے اک بات کہوں گا، تم بھی کچھ فرما دینا

اب کی رُت میں جب دھرتی کو، برکھا کی مہکار ملے
میرے بدن کی مٹی کو بھی، رنگوں سے نہلا دینا

دل دریا ہے دل ساگر ہے، اس دریا اس ساگر کی
ایک ہی لہر کا آنچل تھامے، ساری عمر بتِا دینا

ہم بھی لے کو تیز کریں گے، بوندوں کی بوچھار کے ساتھ
پہلا ساون جھولنے والو، تم بھی پینگ بڑھا دینا

فصل تمہاری اچھی ہوگی، جاو ہمارے کہنے سے
اپنے گاوٗں کی ہر گوری کو، نئی چُنریا لا دینا

ہجر کی آگ میں اے ری ہواوٗ، دو جلتے گھر اگر کہیں
تنہا تنہا جلتے ہوں تو، آگ میں آگ ملا دینا

آج کی رات کوئی بیراگن، کسی سے آنسو بدلے گی
بہتے دریا اُڑتے بادل، جہاں بھی ہوں ٹھہرا دینا

جاتے سال کی آخری شامیں، بالک چوری کرتی ہیں
آنگن آنگن آگ جلانا، گلی گلی پہرہ دینا

نیم کی چھاوٗں میں بیٹھنے والے، سبھی کے سیوک ہوتے ہیں
کوئی ناگ بھی آنکلے تو، اُس کو دودھ پلا دینا

تیرے کرم سے یارب سب کو، اپنی اپنی مراد ملے
جس نے ہمارا دل توڑا ہے، اُس کو بھی بیٹا دینا

یہ مرے پودے، یہ مرے پنچھی، یہ مرے پیارے پیارے لوگ
میرے نام جو بادل آئے، بستی میں برسا دینا

آج دھنک میں رنگ نہ ہوں گے، ویسے جی بہلانے کو
شام ہوئے پر نیلے پیلے، کچھ بیلون اُڑا دینا

اوس سے بھیگے شہر سے باہر، آتے دن سے ملنا ہے
صبح تلک سنسار رہے تو، ہم کو جلد جگا دینا

رئیس فروغ



jawab nahin Meena aap ky intikhab ka... :b)b:



_________________
Image

یاد کراں میں پیار سجن دا، رؤون نین وچارے
دل نوں کنج تسلی دیواں، ٹٹ گئے سب سہارے
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A Page from Meena's diary...
PostPosted: Sat Jul 20, 2013 11:41 am 
Junior Moderator
User avatar

Joined: Sat Nov 26, 2011 1:30 pm
Posts: 15749
Location: ĹŐVĔ ĞĂŔĎĔŃ :)
Meena wrote:





تمہیں کیسے بتائیں ہم

تمہیں کیسے بتائیں ہم
محبت اور کہانی میں کوئ رشتہ نہیں ہوتا
کہانی میں تو ہم واپس بھی آتے ہیں
محبت میں پلٹنے کا کوئ رستہ نہیں ہوتا
!ذراسوچو ۔۔۔
کہیں دل میں خراشیں ڈالتی یادوں کی سفاکی
کہیں دامن سے لپٹی ہے
کسی بُھولی ہوئ ساعت کی نمناکی
کہیں آنکھوں کے خیموں میں
چراغِ خواب گل کرنے کی سازش کو
ہوا دیتی ہوئ راتوں کی چالاکی
مگر میں بندہ خاکی
نہ جانے کتنے فرعونوں سے الجھی ہے
میرے لہجے کی بیباکی
!مجھے دیکھو ۔۔۔۔۔۔۔
میرے چہرے پہ کتنے موسموں کی گرد
اور اِس گرد کی تہہ میں
سمے کی دھوپ میں رکھا اِک آئینہ
اور آئینے میں تاحدِ نظر پھیلے
محبت کے ستارے عکس بن کر جگمگاتے ہیں
نئی دنیاوؤں کا رستہ بتاتے ہیں
اسی منظر میں آئینے سے الجھی کچھ لکیریں ہیں
لکیروں میں کہانی ہے
کہانی اور محبت میں ازل سے جنگ جاری ہے
محبت میں اِک ایسا موڑ آتا ہے
جہاں آ کر کہانی ہار جاتی ہے
کہانی میں تو کچھ کردار ہم خود فرض کرتے ہیں
محبت میں کوئ کردار بھی فرضی نہیں ہوتا
کہانی کو کئ کردار مل جل کر کہیں آگے چلاتے ہیں
محبت اپنے کرداروں کو خود آگے بڑھاتی ہے
کہانی میں کئ کردار زندہ ہی نہیں رہتے
محبت اپنے کرداروں کو مرنے ہی نہیں دیتی
کہانی کے سفر میں منظروں کی دُھول ہوتی ہے
محبت کی مسافت راہ گیروں کو بکھرنے ہی نہیں دیتی
محبت اِک شجر ہے ۔۔۔۔۔ !
اور شجر کو اِس سے کیا مطلب
کہ اِس کے سائے میں جو بھی تھکا ہارا مسافر آ کے بیٹھا ہے
اب اُس کی نسل کیا ہے رنگ کیسا ہے ؟؟
کہاں سے آیا ہے کس سمت جانا ہے
شجر کا کام تو بس چھاوں دینا، دھوپ سہنا ہے
اُسے اِس سے غرض کیا ہے
پڑاو ڈالنے والوں میں کس نے
چھاوں کی تقسیم کا جھگڑا اٹھایا ہے
کہاں کس عہد کو توڑا، کہاں وعدہ نبھایا ہے
مگر ہم جانتے ہیں چھاوں جب تقسیم ہو جائے
تو جلتی دھوپ کے نیزے
رگ و پے میں اترتے ہیں
اور اِس کے زخم خوردہ لوگ
جیتے ہیں نہ مرتے ہیں
!!!.....تمہیں کیسے بتائیں ہم


سلیم کوثر

wahhh bht zabardst bht sachi si bht haseen nazm he Meena ji... :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke:

محبت اِک شجر ہے ۔۔۔۔۔
اور شجر کو اِس سے کیا مطلب
کہ اِس کے سائے میں جو بھی تھکا ہارا مسافر آ کے بیٹھا ہے
اب اُس کی نسل کیا ہے رنگ کیسا ہے ؟؟
کہاں سے آیا ہے کس سمت جانا ہے
شجر کا کام تو بس چھاوں دینا، دھوپ سہنا ہے
اُسے اِس سے غرض کیا ہے
پڑاو ڈالنے والوں میں کس نے
چھاوں کی تقسیم کا جھگڑا اٹھایا ہے
کہاں کس عہد کو توڑا، کہاں وعدہ نبھایا ہے
مگر ہم جانتے ہیں چھاوں جب تقسیم ہو جائے
تو جلتی دھوپ کے نیزے
رگ و پے میں اترتے ہیں
اور اِس کے زخم خوردہ لوگ
جیتے ہیں نہ مرتے ہیں
!!!.....تمہیں کیسے بتائیں ہم

khush rahiye



_________________
Image

Dushman k Chakke Chhura den Hum India wale
Ungli pe sab ko nacha den Hum India wale
Hidden: show
Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Sat Jul 20, 2013 11:46 am 
Junior Moderator
User avatar

Joined: Sat Nov 26, 2011 1:30 pm
Posts: 15749
Location: ĹŐVĔ ĞĂŔĎĔŃ :)
Meena wrote:



وہ پیلے پیڑ کیوں روئے

,مسافر تم ذرا سوچو
یہ اجلی دھوپ جاتے پل
!وہ پیلے پیڑ کیوں روئے
!گلابی پھول کھلتے پل، وہ پیلے پیڑ کیوں روئے
گھنیری شام اپنی زلف کے سائے میں چھپتی ہے
سمندر، بند آنکھوں سے اگر اپنے پپوٹوں میں
کبھی لبریز ہوتا ہے
اگر سوچوں کی لہریں، رفتہ رفتہ ٹوٹ جاتی ہیں
تو قسمت کے سرابوں پر،
اڑی رنگت کے چھینٹوں پر
!وہ پیلے پیڑ کیوں روئے
وہ مدھم چاند کیوں خنجر لیئے چھپ چھپ کے چلتا ہے
محبت چاندنی بن کر،جب اس کے دل میں رہتی ہے
!تو پتھر ہاتھ میں پا کر، وہ پیلے پیڑ کیوں روئے
بہت پر خار ہیں رستے ، بہت بیزار ہیں رستے
جدائی کی فصیلوں سے گزرتے بادلوں کی بجلیوں کو بھول بیٹھے ہیں
جنھیں تم بھول بیٹھے ہو،
وہ اب واپس نہ آئیں گے
کبھی واپس نہ آئیں گے
,وہ واپس آ نہیں سکتے
شگوفے کھل رہے ہیں پھر
کوئی رت بھی نہیں نیلی
کسی ناسور لمحے پر، نہیں یہ آنکھ اب گیلی
اک استفسار باقی ہے
وہ پیلے پیڑ کیوں روئے ۔۔۔؟

bht khbsurat bht haseen nazm he Meena ji... :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke:
khush rahiye



_________________
Image

Dushman k Chakke Chhura den Hum India wale
Ungli pe sab ko nacha den Hum India wale
Hidden: show
Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Sat Jul 20, 2013 11:53 am 
Junior Moderator
User avatar

Joined: Sat Nov 26, 2011 1:30 pm
Posts: 15749
Location: ĹŐVĔ ĞĂŔĎĔŃ :)
Meena wrote:




آنکھوں میں تیرتے ہیں جو خواب شبنمی سے
ہر پل دمک رہی ہوں میں اُن کی روشنی سے

ہونٹوں پہ میرے کیسے ہیں راگ سرمدی سے
جھرنے سے پھوٹتے ہیں لہجے کی نغمگی سے

تُو درد بھی دعا بھی، تُو زخم بھی دوا بھی
شکوے بھی ہیں تجھی سے اور پیار بھی تجھی سے

مجھ سے کبھی ملو تو، چپکے سے پوچھنا تم
منظر سے ہٹ گئی کیوں ناہید خامشی سے

کیسے تجھے بتائیں، کیسے تجھے دکھائیں
دل زخم زخم کتنا ہے تیری دوستی سے

تُو شام بن کے آیا، تُو رات بن کے چھایا
وہ بے خودی ہے مجھ پر، ہوں دُور زندگی سے

اوراقِ زندگی پر سب داستاں رقم ہے
کیوں ایسے جی رہی ہے ناہید بے دلی سے

wahh bht haseen sharing he bht hi haseen.. :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke:

تُو شام بن کے آیا، تُو رات بن کے چھایا
وہ بے خودی ہے مجھ پر، ہوں دُور زندگی سے

khush rahiye



_________________
Image

Dushman k Chakke Chhura den Hum India wale
Ungli pe sab ko nacha den Hum India wale
Hidden: show
Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Sat Jul 20, 2013 11:57 am 
Junior Moderator
User avatar

Joined: Sat Nov 26, 2011 1:30 pm
Posts: 15749
Location: ĹŐVĔ ĞĂŔĎĔŃ :)
Meena wrote:




جنونِ عشق کی رسمِ عجیب، کیا کہنا
میں اُن سے دور، وہ میرے قریب، کیا کہنا

یہ تیرگئ مسلسل میں ایک وقفۂ نور
یہ زندگی کا طلسمِ عجیب، کیا کہنا

جو تم ہو برقِ نشیمن، تو میں نشیمنِ برق
الجھ پڑے ہیں ہمارے نصیب، کیا کہنا

ہجومِ رنگ فراواں سہی، مگر پھر بھی
بہار، نوحۂ صد عندلیب، کیا کہنا

ہزار قافلۂ زندگی کی تیرہ شبی
یہ روشنی سی افق کے قریب، کیا کہنا

لرز گئی تری لو میرے ڈگمگانے سے
چراغِ گوشۂ کوئے حبیب، کیا کہنا

مجید امجد

bht khubsurat sharing he Meena ji... :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke:

جنونِ عشق کی رسمِ عجیب، کیا کہنا
میں اُن سے دور، وہ میرے قریب، کیا کہنا

khush rahiye



_________________
Image

Dushman k Chakke Chhura den Hum India wale
Ungli pe sab ko nacha den Hum India wale
Hidden: show
Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Sat Jul 20, 2013 12:02 pm 
Junior Moderator
User avatar

Joined: Sat Nov 26, 2011 1:30 pm
Posts: 15749
Location: ĹŐVĔ ĞĂŔĎĔŃ :)
Meena wrote:



پلٹ کے دیکھ ذرا میرے شیشہ رو مجھ میں
ترے جمال کا پرتو ھے ۔۔۔۔ چار سو مجھ میں

میں شہر ِ ذات سے نکلوں تو اب کدھر جاؤں ؟
دکھائی دینے لگا ھے جہاں کو تو مجھ میں

گزر گیا مجھے صدیوں کی تشنگی دے کر
وہ ایک پل کہ بھرا تھا مرا سبو مجھ میں

مآل ِ دیدہ ء حسرت ھے نقش نقش ترا
تو نقش ھو جا کسی طرح ہوبہو مجھ میں

میں ایک قریہ ء بے نام کی مسافر ھوں
بھٹک رھی ھے مری خاک کوبکو مجھ میں

ھے بار گاہ ِ محبت میں کون سجدہ نیاز
کہ تیری یاد تو بیٹھی ھے بے وضو مجھ میں

یہ دل دیار ِ محبت میں خاک ھو جاۓ
کبھی نہ مانند پڑے تیری آرزو مجھ میں

سماعتوں میں کھنکتے ھیں نقرئی گھنگرو
تو ھر گھڑی ھے کہیں محو ِ گفتگو مجھ میں

ملے خیال کو ھر لحظہ تیری یاد سے نم
وگرنہ یوں تو مری ِگل ھے بے نمو مجھ میں

محاذ ِ عشق پہ خود کو بناۓ رکھا ڈھال
چھپا ھوا تھا ترے نام کا عدو مجھ میں

غزالہ شاہد

wahh behad haseen ghazal he bht haseen bht hi khubsurat.. :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke:
har shair lajawab he

پلٹ کے دیکھ ذرا میرے شیشہ رو مجھ میں
ترے جمال کا پرتو ھے ۔۔۔۔ چار سو مجھ میں

khush rahiye



_________________
Image

Dushman k Chakke Chhura den Hum India wale
Ungli pe sab ko nacha den Hum India wale
Hidden: show
Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Tue Jul 23, 2013 8:23 pm 
EverGreen Member
User avatar

Joined: Sun Jun 19, 2005 10:34 pm
Posts: 4033
Location: England
meena tamaam saathyon ki shukriya ada kerti hai......aap ne hamari pasand ko pasand kiya....... :)

khush rahye sada

meena



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Tue Jul 23, 2013 8:26 pm 
EverGreen Member
User avatar

Joined: Sun Jun 19, 2005 10:34 pm
Posts: 4033
Location: England




اے چشمِ درد آشنا

اک بوند برس
اک اشک چھلک
خاموش نظر ! کوئی بات تو کر
! دل دکھتا ھے
تو میرے دل پر ھاتھ تو رکھ
میں تیرے ھاتھ پہ دل رکھ دوں
.....دل درد بھرا
جو اس کو چھوئے
یہ اس سے ملے
اک لفظِ محبت بول زرا
میں سارے لفظ تجھے دے دوں
دل درد سراب کو آب سے بھر
تو میرے خواب پہ آنکھ تو دھر
میں تیری آنکھ میں خواب بھروں
خاموش محبت ! بات تو کر
دل دکھتا ھے


شہزاد نیّر



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Tue Jul 23, 2013 9:10 pm 
Moderator
User avatar

Joined: Tue Jun 14, 2011 11:13 pm
Posts: 4607
Location: DG KHAN
Meena wrote:




اے چشمِ درد آشنا

اک بوند برس
اک اشک چھلک
خاموش نظر ! کوئی بات تو کر
! دل دکھتا ھے
تو میرے دل پر ھاتھ تو رکھ
میں تیرے ھاتھ پہ دل رکھ دوں
.....دل درد بھرا
جو اس کو چھوئے
یہ اس سے ملے
اک لفظِ محبت بول زرا
میں سارے لفظ تجھے دے دوں
دل درد سراب کو آب سے بھر
تو میرے خواب پہ آنکھ تو دھر
میں تیری آنکھ میں خواب بھروں
خاموش محبت ! بات تو کر
دل دکھتا ھے


شہزاد نیّر



umdah... :b)b:

Bht acha intakhab :b)b:

Thanks for sharing

:buke: :buke: :buke:




_________________
Image

اگر غم سے بهی آگ کی طرح دهواں نکلتا تو جہاں ہمیشہ تاریک رہتا
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Mon Jul 29, 2013 2:08 am 
EverGreen Member
User avatar

Joined: Sun Jun 19, 2005 10:34 pm
Posts: 4033
Location: England
bht bhut shukriya kash ji...... :)O



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Mon Jul 29, 2013 2:09 am 
EverGreen Member
User avatar

Joined: Sun Jun 19, 2005 10:34 pm
Posts: 4033
Location: England





بس ایک معافی ، ہماری توبہ کبھی جو ایسے ستائیں تم کو
لو ہاتھ جوڑے ، لو کان پکڑے ، اب اور کیسے منائیں تم کو

تمہارے آتے ہی اس نگر سے، ہمیں رقابت سی ہو گئی ہے
میں یہ شرارت بھی کیسے سہہ لوں کہ چھو رہی ہیں ہوائیں تم کو

تم آئینہ ہو اور سنگباری یہاں کے لوگوں کا مشغلہ ہے
ہر ایک پتھر سے ڈھال بن کر،بھلا کہاں تک بچائیں تم کو

جو سچ کہیں تو ، تمھیں تو غصے نے اور دلکش بنا دیا ہے
ہمارے من کو تو سوجھتا ہے ، اب اورغصہ دلائیں تم کو

تو کیا تم اب تک ، ہماری نظروں کے سب تقاضوں سے بے خبر ہو؟
ہمیں محبت ہے تم سے پاگل، اب اور کیسے بتائیں تم کو

بتائیں تم کو بچھڑتے لمحے ، لبوں کی لغزش کا کیا سبب تھا؟
سنا تھا وقتِ قبولیت ہے ، سو دے رہے تھے دعائیں تم کو




_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Tue Jul 30, 2013 10:36 am 
Moderator
User avatar

Joined: Tue Jun 14, 2011 11:13 pm
Posts: 4607
Location: DG KHAN
Meena wrote:





بس ایک معافی ، ہماری توبہ کبھی جو ایسے ستائیں تم کو
لو ہاتھ جوڑے ، لو کان پکڑے ، اب اور کیسے منائیں تم کو

تمہارے آتے ہی اس نگر سے، ہمیں رقابت سی ہو گئی ہے
میں یہ شرارت بھی کیسے سہہ لوں کہ چھو رہی ہیں ہوائیں تم کو

تم آئینہ ہو اور سنگباری یہاں کے لوگوں کا مشغلہ ہے
ہر ایک پتھر سے ڈھال بن کر،بھلا کہاں تک بچائیں تم کو

جو سچ کہیں تو ، تمھیں تو غصے نے اور دلکش بنا دیا ہے
ہمارے من کو تو سوجھتا ہے ، اب اورغصہ دلائیں تم کو

تو کیا تم اب تک ، ہماری نظروں کے سب تقاضوں سے بے خبر ہو؟
ہمیں محبت ہے تم سے پاگل، اب اور کیسے بتائیں تم کو

بتائیں تم کو بچھڑتے لمحے ، لبوں کی لغزش کا کیا سبب تھا؟
سنا تھا وقتِ قبولیت ہے ، سو دے رہے تھے دعائیں تم کو




Awesome... :b)b:

Bht acha intakhab :b)b:

Thanks for sharing

:buke: :buke: :buke:




_________________
Image

اگر غم سے بهی آگ کی طرح دهواں نکلتا تو جہاں ہمیشہ تاریک رہتا
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Wed Jul 31, 2013 10:53 pm 
Special Addict Member
User avatar

Joined: Mon Sep 12, 2011 7:07 pm
Posts: 19039
Location: مع القمر
Meena wrote:





بس ایک معافی ، ہماری توبہ کبھی جو ایسے ستائیں تم کو
لو ہاتھ جوڑے ، لو کان پکڑے ، اب اور کیسے منائیں تم کو

تمہارے آتے ہی اس نگر سے، ہمیں رقابت سی ہو گئی ہے
میں یہ شرارت بھی کیسے سہہ لوں کہ چھو رہی ہیں ہوائیں تم کو

تم آئینہ ہو اور سنگباری یہاں کے لوگوں کا مشغلہ ہے
ہر ایک پتھر سے ڈھال بن کر،بھلا کہاں تک بچائیں تم کو

جو سچ کہیں تو ، تمھیں تو غصے نے اور دلکش بنا دیا ہے
ہمارے من کو تو سوجھتا ہے ، اب اورغصہ دلائیں تم کو

تو کیا تم اب تک ، ہماری نظروں کے سب تقاضوں سے بے خبر ہو؟
ہمیں محبت ہے تم سے پاگل، اب اور کیسے بتائیں تم کو

بتائیں تم کو بچھڑتے لمحے ، لبوں کی لغزش کا کیا سبب تھا؟
سنا تھا وقتِ قبولیت ہے ، سو دے رہے تھے دعائیں تم کو




uff.....meena ....
meri booht hi favrt.... :hug :hug :hug
kis qadar khubsurat intkhaab he aap ka.....
share krne k liye shukriya :hug :)O

sada shaad rahiye : dua



_________________
Image
اُترے تھے کبھی فیض وہ آئینۂ دل میں
عالم ہے وہی آج بھی حیرانیِ دل کا​

Hidden: show
Image
Smile, an everlasting smile
A smile can bring you near to me
<3 <3 <3

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Thu Aug 01, 2013 1:46 pm 
EverGreen Member
User avatar

Joined: Sun Jun 19, 2005 10:34 pm
Posts: 4033
Location: England
bhut bhut shukriya kash ji..... :)O

and sweet Humyra.......... :)O


meena



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Thu Aug 01, 2013 2:28 pm 
Special Super Dooper Member
User avatar

Joined: Sat Oct 07, 2006 12:20 am
Posts: 91799
Location: +92 :-p
Meena wrote:





بس ایک معافی ، ہماری توبہ کبھی جو ایسے ستائیں تم کو
لو ہاتھ جوڑے ، لو کان پکڑے ، اب اور کیسے منائیں تم کو

تمہارے آتے ہی اس نگر سے، ہمیں رقابت سی ہو گئی ہے
میں یہ شرارت بھی کیسے سہہ لوں کہ چھو رہی ہیں ہوائیں تم کو

تم آئینہ ہو اور سنگباری یہاں کے لوگوں کا مشغلہ ہے
ہر ایک پتھر سے ڈھال بن کر،بھلا کہاں تک بچائیں تم کو

جو سچ کہیں تو ، تمھیں تو غصے نے اور دلکش بنا دیا ہے
ہمارے من کو تو سوجھتا ہے ، اب اورغصہ دلائیں تم کو

تو کیا تم اب تک ، ہماری نظروں کے سب تقاضوں سے بے خبر ہو؟
ہمیں محبت ہے تم سے پاگل، اب اور کیسے بتائیں تم کو

بتائیں تم کو بچھڑتے لمحے ، لبوں کی لغزش کا کیا سبب تھا؟
سنا تھا وقتِ قبولیت ہے ، سو دے رہے تھے دعائیں تم کو



aagha meena :b)b:



_________________
Image
........ILYSML.......

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Thu Aug 01, 2013 5:20 pm 
Baby Addict Member
User avatar

Joined: Sun May 02, 2010 7:46 pm
Posts: 9221
Location: UAE
bht hi nice shairings hain meena jee :b)b: :buke: :)O



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: a page from meena's diary
PostPosted: Mon Aug 05, 2013 12:43 pm 
Junior Moderator
User avatar

Joined: Sat Nov 26, 2011 1:30 pm
Posts: 15749
Location: ĹŐVĔ ĞĂŔĎĔŃ :)
Ay chashm dard aashna
wahh bht Zabardst nazm he bht hi haseen.. :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke: :buke:
khush rahiye



_________________
Image

Dushman k Chakke Chhura den Hum India wale
Ungli pe sab ko nacha den Hum India wale
Hidden: show
Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Tue Aug 06, 2013 8:12 pm 
Moderator
User avatar

Joined: Sun Feb 14, 2010 6:59 pm
Posts: 14280
Meena wrote:





بس ایک معافی ، ہماری توبہ کبھی جو ایسے ستائیں تم کو
لو ہاتھ جوڑے ، لو کان پکڑے ، اب اور کیسے منائیں تم کو

تمہارے آتے ہی اس نگر سے، ہمیں رقابت سی ہو گئی ہے
میں یہ شرارت بھی کیسے سہہ لوں کہ چھو رہی ہیں ہوائیں تم کو

تم آئینہ ہو اور سنگباری یہاں کے لوگوں کا مشغلہ ہے
ہر ایک پتھر سے ڈھال بن کر،بھلا کہاں تک بچائیں تم کو

جو سچ کہیں تو ، تمھیں تو غصے نے اور دلکش بنا دیا ہے
ہمارے من کو تو سوجھتا ہے ، اب اورغصہ دلائیں تم کو

تو کیا تم اب تک ، ہماری نظروں کے سب تقاضوں سے بے خبر ہو؟
ہمیں محبت ہے تم سے پاگل، اب اور کیسے بتائیں تم کو

بتائیں تم کو بچھڑتے لمحے ، لبوں کی لغزش کا کیا سبب تھا؟
سنا تھا وقتِ قبولیت ہے ، سو دے رہے تھے دعائیں تم کو



wah buhat khubsurat ashaar share kiye hain meena zabardast .......... :b)b: :b)b: :b)b: :b)b: :)O :)O :)O :)O :)O



_________________
Image
Image



میرے صبر پر کوئی اجر کیا، میری دوپہر پر یہ ابر کیوں؟
مجھے اوڑھنے دے اذیتیں، میری عادتیں نہ خراب کر
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Tue Aug 06, 2013 9:00 pm 
Special Super Dooper Member
User avatar

Joined: Sat Dec 10, 2005 6:13 am
Posts: 43724
Location: London
Meena wrote:





بس ایک معافی ، ہماری توبہ کبھی جو ایسے ستائیں تم کو
لو ہاتھ جوڑے ، لو کان پکڑے ، اب اور کیسے منائیں تم کو

تمہارے آتے ہی اس نگر سے، ہمیں رقابت سی ہو گئی ہے
میں یہ شرارت بھی کیسے سہہ لوں کہ چھو رہی ہیں ہوائیں تم کو

تم آئینہ ہو اور سنگباری یہاں کے لوگوں کا مشغلہ ہے
ہر ایک پتھر سے ڈھال بن کر،بھلا کہاں تک بچائیں تم کو

جو سچ کہیں تو ، تمھیں تو غصے نے اور دلکش بنا دیا ہے
ہمارے من کو تو سوجھتا ہے ، اب اورغصہ دلائیں تم کو

تو کیا تم اب تک ، ہماری نظروں کے سب تقاضوں سے بے خبر ہو؟
ہمیں محبت ہے تم سے پاگل، اب اور کیسے بتائیں تم کو

بتائیں تم کو بچھڑتے لمحے ، لبوں کی لغزش کا کیا سبب تھا؟
سنا تھا وقتِ قبولیت ہے ، سو دے رہے تھے دعائیں تم کو



buhat khubsoorat dil ko chhoo janay wali ghazal....kiya baat hae aapke integhaab ki
wahhh !
khush rahain :dua



_________________
Image
Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: a page from meena's diary
PostPosted: Mon Aug 12, 2013 4:15 pm 
EverGreen Member
User avatar

Joined: Sun Jun 19, 2005 10:34 pm
Posts: 4033
Location: England
meena ki pasand ko pasand kernay per..........meena tamaam saathyoN ki tah e dil se mashkoor hai..... :)

khush rahye sada.... :)O



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: a page from meena's diary
PostPosted: Mon Aug 12, 2013 4:17 pm 
EverGreen Member
User avatar

Joined: Sun Jun 19, 2005 10:34 pm
Posts: 4033
Location: England



سر بزم تحیر رُو بروئے یار می رقصم
وفور عشق سے امشب ستارہ وار می رقصم

میں ایسا ہوں کہ وہ کبھی مجھ سے غافل نہیں رہتا
تو کیسا ہے ؟وہ جب کرتا ہے استفسار.می رقصم

مِری وحشت تو میرے پاؤں ٹکنے ہی نہیں دیتی
سرِخانہ،سرِمحفل سر بازار می رقصم

نظر ٹھہرے جہاں میری ،وہیں رہتا ہوں میں رقصاں
اسی باعث سدا پیش لب و رخسار می رقصم

ادھر تو دھیان ہی میرا نہیں اجرِ وفا کیا ہے
ترے قدموں میں رکھ کر جبُہ و دستار می رقصم

نچایا عشق نے جیسے بُلھے کو تھَیا تھَیا کر
اُسی دھج سے بوقت جستجوئے یار می رقصم

سبھی بستی مردوزن نجانے سو گئے کب سے
مگر جاڑے کی ایک شب میں ایک زندہ دار ،می رقصم

اِسی باعث تو میں تھکتا نہیں ناچتے گاتے
بہت کھینچا ہوا ہے عشق میں آزار ، می رقصم

کبھی ہیں جام پرنظریں ،کبھی گُلفام پر نظریں
میں ہوں مے نوش،می رقصم ، میں ہوں دلدار می رقصم

نہیں جانوں کہ وہ ہے دوسرے رَقاص پر شیدا
میں جانوں یہ کہ وہ کتنا ہے جانبدار ، می رقصم

کوئی بھیگا بدن ہے نیم عریاں سامنے میرے
سناتے ہیں میرے گھنگرو مجھے ملہار، می رقصم

دھلے پر دیکھ کر میرا ،مِرا ہمزاد خوش ہوگا
گھٹا برسی ہے ،میں کھولے ہوئے منقار ،می رقصم

یہ وہ دنیا نہیں جس کے لیے آیا تھا دنیا میں
مگر اوروں کے جیسا بن کے دنیا دار، می رقصم

بڑے چکر ہیں چاہت میں بڑے چرکے ہیں قسمت میں
تہِ شمشیر می رقصم ، تہ پرکار می رقصم

عجب خوفِ قیامت ہے کہ ہر پل تھر تھراتا ہوں
کہ لرزے زلزلے سے جس طرح کہسار ، می رقصم

مدارج رقص کے بے انتہا ہیں سامنے میرے
کسی کے بیچ می رقصم ، کسی کے پار می رقصم

بغیر اس کے تو ہوجاتا ہے خود کو دیکھنا مشکل
میں جب تکتا ہوں وہ آئینۂ رخسار، می رقصم

موذن اور امام اکثر مجھے چھپ چھپ کے تکتے ہیں
عبادت گاہ میں (مجھ پر خدا کی مار ) می رقصم

ترے اہلِ محلہ کا سلوک اچھا نہیں تو کیا
مجھے کب روک پائی ہے کوئی دھتکار ، می رقصم

ازل سے دائرہ اور دائرہ رقصاں رہا یعنی
میں دستِ غیب کے تابع تہِ پُرکارمی رقصم

قوافی مَیں نہیں لکھوں گا یہ' تو کون لکھے گا
اگر آزار ہے یہ تو بصد آزار ،می رقصم

ظفر ہیں بعد کی باتیں ، خریدا جائے گا مجھ کو
ابھی تو ازلِ شب ، زینت دربار می رقصم



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: a page from meena's diary
PostPosted: Tue Aug 13, 2013 12:32 am 
Moderator
User avatar

Joined: Sun Feb 14, 2010 6:59 pm
Posts: 14280
Meena wrote:



سر بزم تحیر رُو بروئے یار می رقصم
وفور عشق سے امشب ستارہ وار می رقصم

میں ایسا ہوں کہ وہ کبھی مجھ سے غافل نہیں رہتا
تو کیسا ہے ؟وہ جب کرتا ہے استفسار.می رقصم

مِری وحشت تو میرے پاؤں ٹکنے ہی نہیں دیتی
سرِخانہ،سرِمحفل سر بازار می رقصم

نظر ٹھہرے جہاں میری ،وہیں رہتا ہوں میں رقصاں
اسی باعث سدا پیش لب و رخسار می رقصم

ادھر تو دھیان ہی میرا نہیں اجرِ وفا کیا ہے
ترے قدموں میں رکھ کر جبُہ و دستار می رقصم

نچایا عشق نے جیسے بُلھے کو تھَیا تھَیا کر
اُسی دھج سے بوقت جستجوئے یار می رقصم

سبھی بستی مردوزن نجانے سو گئے کب سے
مگر جاڑے کی ایک شب میں ایک زندہ دار ،می رقصم

اِسی باعث تو میں تھکتا نہیں ناچتے گاتے
بہت کھینچا ہوا ہے عشق میں آزار ، می رقصم

کبھی ہیں جام پرنظریں ،کبھی گُلفام پر نظریں
میں ہوں مے نوش،می رقصم ، میں ہوں دلدار می رقصم

نہیں جانوں کہ وہ ہے دوسرے رَقاص پر شیدا
میں جانوں یہ کہ وہ کتنا ہے جانبدار ، می رقصم

کوئی بھیگا بدن ہے نیم عریاں سامنے میرے
سناتے ہیں میرے گھنگرو مجھے ملہار، می رقصم

دھلے پر دیکھ کر میرا ،مِرا ہمزاد خوش ہوگا
گھٹا برسی ہے ،میں کھولے ہوئے منقار ،می رقصم

یہ وہ دنیا نہیں جس کے لیے آیا تھا دنیا میں
مگر اوروں کے جیسا بن کے دنیا دار، می رقصم

بڑے چکر ہیں چاہت میں بڑے چرکے ہیں قسمت میں
تہِ شمشیر می رقصم ، تہ پرکار می رقصم

عجب خوفِ قیامت ہے کہ ہر پل تھر تھراتا ہوں
کہ لرزے زلزلے سے جس طرح کہسار ، می رقصم

مدارج رقص کے بے انتہا ہیں سامنے میرے
کسی کے بیچ می رقصم ، کسی کے پار می رقصم

بغیر اس کے تو ہوجاتا ہے خود کو دیکھنا مشکل
میں جب تکتا ہوں وہ آئینۂ رخسار، می رقصم

موذن اور امام اکثر مجھے چھپ چھپ کے تکتے ہیں
عبادت گاہ میں (مجھ پر خدا کی مار ) می رقصم

ترے اہلِ محلہ کا سلوک اچھا نہیں تو کیا
مجھے کب روک پائی ہے کوئی دھتکار ، می رقصم

ازل سے دائرہ اور دائرہ رقصاں رہا یعنی
میں دستِ غیب کے تابع تہِ پُرکارمی رقصم

قوافی مَیں نہیں لکھوں گا یہ' تو کون لکھے گا
اگر آزار ہے یہ تو بصد آزار ،می رقصم

ظفر ہیں بعد کی باتیں ، خریدا جائے گا مجھ کو
ابھی تو ازلِ شب ، زینت دربار می رقصم



subhanallah meena hamesha ki tarah chun kar mooti sajaya hai yahan keep it up.............. :b)b: :b)b: :b)b: :)O :)O :)O :)O :)O :)O



_________________
Image
Image



میرے صبر پر کوئی اجر کیا، میری دوپہر پر یہ ابر کیوں؟
مجھے اوڑھنے دے اذیتیں، میری عادتیں نہ خراب کر
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Tue Aug 13, 2013 12:35 am 
Special Super Dooper Member
User avatar

Joined: Sat Dec 10, 2005 6:13 am
Posts: 43724
Location: London
wahhh meena kiya kamal ki shairy ess baar aap hamare lia montaghib kr k laai hain...buhat umdah
khush rahain :dua



_________________
Image
Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Thu Aug 15, 2013 1:37 am 
EverGreen Member
User avatar

Joined: Sun Jun 19, 2005 10:34 pm
Posts: 4033
Location: England
bht shukriya Qaiser...... :)O

and..........

shweeet subahh di....... :)O

meena



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Thu Aug 15, 2013 1:38 am 
EverGreen Member
User avatar

Joined: Sun Jun 19, 2005 10:34 pm
Posts: 4033
Location: England
Image

Image

Image

Image



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Sat Aug 17, 2013 2:30 pm 
EverGreen Member
User avatar

Joined: Sun Jun 19, 2005 10:34 pm
Posts: 4033
Location: England





تیری یاد اور تیرے دھیان میں گزری ہے
ساری زندگی ایک مکان میں گزری ہے


اس تاریک فضا میں میری ساری عمر
دیا جلانے کے امکان میں گزری ہے


اپنے لیے جو شام بچا کر رکھی تھی
وہ تجھ سے عہد و پیمان میں گزری ہے


تجھ سے اکتا جانے کی اک ساعت بھی
تیرے عشق ہی کے دوران میں گزری ہے


دیواروں کا شوق جہاں تھا سب کو جمال
عمر مری اُس خاندان میں گزری ہے






_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Sun Aug 18, 2013 9:41 pm 
Moderator
User avatar

Joined: Tue Jun 14, 2011 11:13 pm
Posts: 4607
Location: DG KHAN
Meena wrote:
Image

Image

Image

Image



Awesome... :b)b:

Bht acha intakhab :b)b:

Thanks for sharing

:buke: :buke: :buke:




_________________
Image

اگر غم سے بهی آگ کی طرح دهواں نکلتا تو جہاں ہمیشہ تاریک رہتا
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Tue Sep 03, 2013 11:56 pm 
Shine Star Member
User avatar

Joined: Wed Feb 02, 2011 2:56 pm
Posts: 20878
Location: Lahore
Meena wrote:





تیری یاد اور تیرے دھیان میں گزری ہے
ساری زندگی ایک مکان میں گزری ہے


اس تاریک فضا میں میری ساری عمر
دیا جلانے کے امکان میں گزری ہے


اپنے لیے جو شام بچا کر رکھی تھی
وہ تجھ سے عہد و پیمان میں گزری ہے


تجھ سے اکتا جانے کی اک ساعت بھی
تیرے عشق ہی کے دوران میں گزری ہے


دیواروں کا شوق جہاں تھا سب کو جمال
عمر مری اُس خاندان میں گزری ہے





Bht khoob Meena ji..... :b)b: :b)b:
Khush rahiye....Ameen :)O :)O



_________________
Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Sat Sep 07, 2013 12:56 am 
EverGreen Member
User avatar

Joined: Sun Jun 19, 2005 10:34 pm
Posts: 4033
Location: England
bht bht shukriya kash ji...... :)O

and sweeeeet sara.......... :)O


meena



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Sat Sep 07, 2013 12:59 am 
EverGreen Member
User avatar

Joined: Sun Jun 19, 2005 10:34 pm
Posts: 4033
Location: England



چُپکے چُپکے رات دن آنسو بہانا یاد ہے
ہم کو اب تک عاشقی کا وہ زمانہ یاد ہے

با ہزاراں اضطراب و صد ہزاراں اشتیاق
تجھ سے وہ پہلے پہل دل کا لگانا یاد ہے

بار بار اُٹھنا اُسی جانب نگاہِ شوق کا
اور تِرا غرفےسے وہ آنکھیں لڑانا یاد ہے

تجھ سے کچھ مِلتے ہی وہ بے باک ہو جانا مِرا
اور تِرا دانتوں میں وہ اُنگلی دبانا یاد ہے

کھینچ لینا وہ مِرا پردے کا کونا دفعتاً
اور دوپٹے سے تِرا وہ منھ چھپانا یاد ہے

جان کر سوتا تجھے وہ قصْدِ پا بوسی مِرا
اور تِرا ٹھکرا کے سر، وہ مُسکرانا یاد ہے

تجھ کو تنہا جب کبھِی پانا تو از راہِ لحاظ
حالِ دل باتوں ہی باتوں میں جتانا یاد ہے

جب سَوا میرے تمہارا کوئی دیوانہ نہ تھا
سچ کہو کچھ تم کو بھی وہ کارِخانہ یاد ہے

غیر کی نظروں سے بچ کر سب کی مرضی کے خلاف
وہ تِرا چوری چھپے راتوں کو آنا یاد ہے

آگیا گر وصْل کی شب بھی کہیں ذکرِ فراق
وہ تِرا رو رو کے مجھ کو بھی رُلانا یاد ہے

دوپہر کی دُھوپ میں، میرے بُلانے کے لئے
وہ تِرا کوٹھے پہ ننگے پاؤں آنا یاد ہے

آج تک نظروں میں ہے وہ صُحْبَت و راز و نیاز
اپنا جانا یاد ہے، تیرا بُلانا یاد ہے

مِیٹھی مِیٹھی چھیڑ کی باتیں نرالی پیار کی
ذکردشمن کا وہ باتوں میں اڑانا یاد ہے

دیکھنا مجھ کو جو برگشتہ تو سو سو ناز سے
جب منا لینا تو پھر خود روٹھ جانا یاد ہے

چوری چوری ہم سے تم آ کر مِلے تھے جس جگہ
مُدّتیں گُزریں، پر اب تک وہ ٹھکانا یاد ہے

شوق میں مہندی کے وہ بے دست وپا ہونا ترا
اور مِرا وہ چھیڑنا ، وہ گُدگُدانا یاد ہے

باوجودِ اِدّعائے اِتّقا حسرت مجھے
آج تک عہدِ ہَوَس کا وہ فسانہ یاد ہے




_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Sat Sep 07, 2013 11:08 am 
Moderator
User avatar

Joined: Thu Jan 21, 2010 2:47 pm
Posts: 8830
Location: apney dil ky dil mein
Meena wrote:



چُپکے چُپکے رات دن آنسو بہانا یاد ہے
ہم کو اب تک عاشقی کا وہ زمانہ یاد ہے

با ہزاراں اضطراب و صد ہزاراں اشتیاق
تجھ سے وہ پہلے پہل دل کا لگانا یاد ہے

بار بار اُٹھنا اُسی جانب نگاہِ شوق کا
اور تِرا غرفےسے وہ آنکھیں لڑانا یاد ہے

تجھ سے کچھ مِلتے ہی وہ بے باک ہو جانا مِرا
اور تِرا دانتوں میں وہ اُنگلی دبانا یاد ہے

کھینچ لینا وہ مِرا پردے کا کونا دفعتاً
اور دوپٹے سے تِرا وہ منھ چھپانا یاد ہے

جان کر سوتا تجھے وہ قصْدِ پا بوسی مِرا
اور تِرا ٹھکرا کے سر، وہ مُسکرانا یاد ہے

تجھ کو تنہا جب کبھِی پانا تو از راہِ لحاظ
حالِ دل باتوں ہی باتوں میں جتانا یاد ہے

جب سَوا میرے تمہارا کوئی دیوانہ نہ تھا
سچ کہو کچھ تم کو بھی وہ کارِخانہ یاد ہے

غیر کی نظروں سے بچ کر سب کی مرضی کے خلاف
وہ تِرا چوری چھپے راتوں کو آنا یاد ہے

آگیا گر وصْل کی شب بھی کہیں ذکرِ فراق
وہ تِرا رو رو کے مجھ کو بھی رُلانا یاد ہے

دوپہر کی دُھوپ میں، میرے بُلانے کے لئے
وہ تِرا کوٹھے پہ ننگے پاؤں آنا یاد ہے

آج تک نظروں میں ہے وہ صُحْبَت و راز و نیاز
اپنا جانا یاد ہے، تیرا بُلانا یاد ہے

مِیٹھی مِیٹھی چھیڑ کی باتیں نرالی پیار کی
ذکردشمن کا وہ باتوں میں اڑانا یاد ہے

دیکھنا مجھ کو جو برگشتہ تو سو سو ناز سے
جب منا لینا تو پھر خود روٹھ جانا یاد ہے

چوری چوری ہم سے تم آ کر مِلے تھے جس جگہ
مُدّتیں گُزریں، پر اب تک وہ ٹھکانا یاد ہے

شوق میں مہندی کے وہ بے دست وپا ہونا ترا
اور مِرا وہ چھیڑنا ، وہ گُدگُدانا یاد ہے

باوجودِ اِدّعائے اِتّقا حسرت مجھے
آج تک عہدِ ہَوَس کا وہ فسانہ یاد ہے



wah! meena Ji boht khob... :buke:



_________________
Image

یاد کراں میں پیار سجن دا، رؤون نین وچارے
دل نوں کنج تسلی دیواں، ٹٹ گئے سب سہارے
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Mon Sep 09, 2013 12:39 am 
EverGreen Member
User avatar

Joined: Sun Jun 19, 2005 10:34 pm
Posts: 4033
Location: England
bht bht shukriya haifa ji.... :)O

meena



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
 Post subject: Re: A page.......from meena's diary...
PostPosted: Mon Sep 09, 2013 12:42 am 
EverGreen Member
User avatar

Joined: Sun Jun 19, 2005 10:34 pm
Posts: 4033
Location: England



ترا قرب تھا کہ فراق تھا وہی تیری جلوہ گری رہی​
کہ جو روشنی ترے جسم کی تھی مرے بدن میں بھری رہی​

ترے شہر میں چلا تھا جب تو کوئی بھی ساتھ نہ تھا مرے​
تو میں کس سے محوِ کلام تھا؟ تو یہ کس کی ہمسفری رہی؟​

مجھے اپنے آپ پہ مان تھا کہ نہ جب تلک ترا دھیان تھا​
تو مثال تھی مری آگہی تو کمال بے خبری رہی​

مرے آشنا بھی عجیب تھے نہ رفیق تھے نہ رقیب تھے​
مجھے جاں سے درد عزیز تھا انہیں فکرِ چارہ گری رہی​

میں یہ جانتا تھا مرا ہنر ہے شکست و ریخت سے معتبر​
جہاں لوگ سنگ بدست تھے وہیں میری شیشہ گری رہی​

جہاں ناصحوں کا ہجوم تھا وہیں عاشقوں کی بھی دھوم تھی​
جہاں بخیہ گر تھے گلی گلی وہیں رسمِ جامہ دری رہی​

ترے پاس آ کے بھی جانے کیوں مری تشنگی میں ہراس تھا​
بہ مثالِ چشمِ غزال جو لبِ آبجو بھی ڈری رہی​

جو ہوس فروش تھے شہر کے سبھی مال بیچ کے جا چکے​
مگر ایک جنسِ وفا مری سرِ رَہ دھری کی دھری رہی​

مرے ناقدوں نے فرازؔ جب مرا حرف حرف پرکھ لیا​
تو کہا کہ عہدِ ریا میں بھی جو بات کھری تھی کھری رہی​



_________________
Image

Image
Offline
 Profile  
 
Display posts from previous:  Sort by  
 Page 24 of 25 [ 982 posts ]  Go to page Previous  1 ... 21, 22, 23, 24, 25  Next

All times are UTC + 5 hours


Who is online

Users browsing this forum: No registered users and 1 guest


You cannot post new topics in this forum
You cannot reply to topics in this forum
You cannot edit your posts in this forum
You cannot delete your posts in this forum
You cannot post attachments in this forum

Jump to: